Author Topic: کیا جانیے کیا ہے حد ادراک سے آگے  (Read 33 times)

0 Members and 1 Guest are viewing this topic.

Offline Rehana.a

  • Global Moderator
  • Sukhanwar
  • *****
  • Posts: 4815
  • Karma: 72
  • خدا وہ وقت نہ لائے کہ سوگوار ہو تو

ابرار احمد
   

کیا جانیے کیا ہے حد ادراک سے آگے

بس خاک ہے اس تیری مری خاک سے آگے

ہے شور فغاں خامشیٔ مرگ کے پیچھے

اک تیز ہوا ہے خس و خاشاک سے آگے

ہم دیکھتے ہیں آنکھ میں سہمے ہوئے آنسو

اک چپ ہے کہیں خندۂ بے باک سے آگے

اک رنگ سا ہے رنگ تمنا سے مماثل

اک ابر سا ہے دیدۂ نم ناک سے آگے

میں اپنے کسی خواب کی منہ زور ہوا میں

اکثر ہی نکل جاتا ہوں افلاک سے آگے

کیا شور کریں گریۂ عشاق سے بڑھ کر

کیا زور کریں پیرہن چاک سے آگے
     
ریحانہ احمد